Home / اہم خبریں / ’میرے شوہر سے شادی کرلو‘ اخبار میں اشتہار دینے والی خاتون، وجہ جان کر آپ بھی سر پکڑ لیں گے

’میرے شوہر سے شادی کرلو‘ اخبار میں اشتہار دینے والی خاتون، وجہ جان کر آپ بھی سر پکڑ لیں گے

امریکی اخبار نیویارک ٹائمز میں ایک خاتون نے اپنے شوہر کی شادی کا اشتہار دے ڈالا اس انوکھے اشتہار کو دنیا بھر کے میڈیا نے کوریج دی۔ یہ اشتہار 2017 میں شائع ہوا ۔بیوی کی طرف سے ایسا اشتہار دیئے جانے کی اصل وجہ بھی سامنے آ گئی ہے۔

نجی ویب سائٹ کئے مطابق کے مطابق ایمی کروز نامی مصنفہ تھی اور بچوں کا ادب لکھتی تھی جس نے اپنے شوہر جیسن کی شادی کا اشتہار دیا۔ اب جیسن نے ایک کتاب تصنیف کی ہے جس میں اس نے اس کی وجہ بیان کر دی ہے۔ جیسن لکھتا ہے کہ ہماری 26سالہ ازدواجی زندگی انتہائی خوشگوار رہی۔ ایمی بہترین شریک حیات تھی۔ وہ اووری کے کینسر میں مبتلا تھی اور ڈاکٹروں نے اسے چند ہفتے کی مہلت دے رکھی تھی۔جیسن لکھتا ہے کہ ”اسی دوران ایمی نے میری شادی کا اشتہار دے دیا

کیونکہ وہ چاہتی تھی کہ اس کی زندگی میں ہی میری دوسری شادی ہو جائے۔ وہ سمجھتی تھی کہ محبت کبھی ختم نہیں ہوتی۔ محبت کی ایک کہانی کا اختتام ہوتا ہے تو وہیں سے دوسری کہانی شروع ہو جاتی ہے۔ “واضح رہے کہ اپنے اس اشتہار میں ایمی نے لکھا تھا کہ ”کیا آپ میرے شوہر سے شادی کریں گی؟ وہ ایک ایسا شخص ہے جس کے ساتھ آسانی سے محبت ہو جاتی ہے۔ وہ ایک کامیاب وکیل، متاثر کن باپ، خوش لباس، ایڈونچر پسند، سفر کا شوقین اور گھر کے کام کاج میں ہاتھ بٹانے والا شخص ہے مگر وہ کھانا انتہائی برا بناتا ہے۔

“واضح رہے کہ اس اشتہار کی اشاعت کے چند ہفتے بعدمارچ 2017ءمیں ایمی کا انتقال ہو گیا تھا اور جیسن کی شادی اس کی زندگی میں تو نہ ہو سکی تاہم اس کے انتقال کے چند ہفتے بعد اس کے اشتہار کی بدولت ہی جیسن کی دوسری شادی ہو گئی۔ جیسن اپنی اس دوسری بیوی کو ایمی کی طرف سے ملنے والا تحفہ قرار دیتا ہے اور کتاب کے آخر میں اس تحفے پر ایمی کا شکریہ بھی ادا کرتا ہے۔

Check Also

آپ سے تو یہ توقع نہ تھی : امت مسلمہ کے خواب چکنا چور کرنے والے اسرائیل متحدہ عرب امارات..

Post Views: 13 اسرائیل امارات تعلقات کی بحالی پر امریکا کے بعدچین ، یورپ اور …

اسرائیل اور متحدہ عرب امارات کے معاہدے کے بعد ایک اور بڑی خبر ۔۔۔ بھارت نے کس اسلامی ملک..

Post Views: 13 جنوبی ایشیائی خطے میں چین کے بڑھتے ہوئے اثرات کا مقابلہ کرنے …

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *