67

بریکنگ نیوز: اہل علاقہ کے بیان نے ہر طرف ہلچل مچا دی

موٹروے بد فعلی کیس کا دوسرا ملزم شفقت بہاولنگر کی تحصیل ہارون آباد کا رہائشی ہے اور 6 ماہ پہلے پورا خاندان علاقہ چھوڑ گیا لیکن ان کا خوف آج بھی ختم نہیں ہوا۔ اہل علاقہ کے مطابق پورا خاندان ڈکیتی کی وارداتوں میں ملوث ہے اور انہوں نے علاقے
میں خوف کی فضا قائم کر رکھی تھی، اہل علاقہ ان کے بارے میں کھل کر بات کرتے ہوئے ڈرتے ہیں۔ اہل علاقہ نے بتایا کہ ملزم شفقت اور اس کا بھائی بابر بھی عابد کے ساتھ وارداتوں میں ملوث تھے، 2019 میں شفقت کے بھائی بابر نے بد فعلی کیس کے مرکزی ملزم عابد کے ساتھ ایک بیوہ خاتون کے ساتھ واردات کی اور ضمانت پررہا ہو کر آیا تو متاثرہ خاتون کے خاندان کو دھمکیاں دیتا رہا۔ ملزم شفقت کے آبائی گاؤں میں لوگ ابھی تک اُن سے ڈرے ہوئے تھے اور زبان کھولنے سے کتراتے رہے۔ ان کا کہنا تھا کہ 6 ماہ پہلے شفقت اپنے باپ اللہ دتہ اور بھائی بابر کے ساتھ یہاں سے نکل گیا، انہیں معلوم نہیں کہ وہ اب کہاں ہیں۔؟ سی ٹی ڈی پولیس نے موٹروے بد فعلی کیس میں ملزم عابد علی کے ساتھی شفقت کو گرفتار کرلیا ہے، جسے خود سے گرفتاری دینے والے ملزم وقارالحسن کے سالے عباس کی نشاندہی پر گرفتار کیا گیا۔ شفقت کو دیپالپور سے حراست میں لیا گیا اور اسے لاہور منتقل کردیا گیا ہے۔ پولیس ذرائع کے مطابق ملزم شفقت سابقہ ریکارڈ یافتہ ہے اور اس نے پولیس کے سامنے اعتراف جرم کر لیا ہے۔ وہ واردات کے روز جائے وقوعہ پر موجود تھا۔ شفقت کا ڈی این اے بھی متاثرہ خاتون کے نمونوں سے میچ کرگیا جس کے نتیجے میں پولیس کے ہاتھ حتمی ثبوت آگیا ہے۔ پولیس کے مطابق پورا گینگ ٹریس کرنے کے قریب پہنچ چکے ہیں اور عابد علی کی گرفتاری کے لیے بھی چھاپے مارے جارہے ہیں۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں